رمضان کےستائیسویں دن کی دعا کے پیغامات اور تشریح

اَللَّهُمَّ ارْزُقْنِي فِيهِ فَضْلَ لَيْلَهِ الْقَدْرِ

شب قدر عجیب رات ہے کہ ملائکہ آسمان سے نازل ہوتے ہیں تاکہ ہماری تقدیروں کو تعین کریں۔کیا ہمارے دل فرشتوں کے نزول کے لیے تیار ہے؟ کیا اس دنیا کی محبت نے ہمارے دلوں میں کسی اور کے لئے جگہ رکھی ہے؟

پروردگار اس مہینے میں ہمارے دل میں بسے شیطان کو نکال دے تاکہ  ملائکہ ہمارے دلوں پر نازل ہو سکیں۔

وَ صَيِّرْ أُمُورِي فِيهِ مِنَ الْعُسْرِ إلَي الْيُسْرِ

 یہ دنیا مشکلات کی جگہ ہے اور ہر انسان مختلف سختیوں کا شکار ہوتا ہے خدا ان سب کو ہمارے آسان بنا دے جب ہم خدا پر توکل اور اس سے امید لگائیں گے تو یہ سختیاں اور مشکلات ہمارے لیے آسان ہو جائیں گی۔

وَ اقْبَلْ مَعَاذِيرِي وَ حُطَّ عَنِّيَ الذَّنْبَ وَ الْوِزْرَ يَا رَؤُفاً بِعِبَادِهِ الصَّالِحِينَ

 خدایا تیرے در پر آئے ہیں تجھ سے بخشش لینے بہت برے انسان نے بھی جب تیرے دروازے  پر  تواضع  کیا تو نے  انہیں بخش دیا تو ہی رؤف بھی ہے اور رحیم بھی خدایا ہم بھی تجھ سے التجا کرتے ہیں ہمارے گناہوں کو پاک کر دے اور ہمارے نامہ اعمال سے  ان کو محو کر دے