پاکستان میں زلزلے سے تباہی پروزیراعظم، صدر کا اظہار افسوس

زلزلے کے نتیجے میں 30 افراد جاں بحق اور 400 سے زائد زخمی ہوئے ہیں۔

 پاکستان کے صدر عارف علوی اور وزیراعظم عمران خان نے زلزلے کے نتیجے میں جانی و مالی نقصان پر گہرے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے جاں بحق افراد کی بلندیٔ درجات اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کے لیے دعا کی اورمتاثرہ علاقے میں ریلیف کے سلسلے میں متعلقہ محکموں کو ہر قسم کی معاونت کی فوری فراہمی کی ہدایت کی۔

آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ میرپور ، جڑی کس اور جاتلاں کے علاقوں میں فضائی جائزہ مکمل کیا گیا جب کہ پاک فوج کے دستے زلزلے سے متاثرہ علاقوں میں پہنچ گئے ہیں۔

زلزلہ پیما مرکز کے مطابق ریکٹر اسکیل پر زلزلے کی شدت 5.8 ریکارڈ کی گئی اور گہرائی 10 کلومیٹر تھی جبکہ زلزلے کا مرکز کشمیر کے شہر میرپور میں تھا۔

میرپور میں زلزلےسےعمارت گرگئی جس کے نتیجے میں وہاں موجود 50 افراد ملبے تلے دب گئے۔ متعدد افراد کو زخمی حالت میں اسپتال منتقل کردیا گیا ہے جبکہ امدادی کارروائیاں جاری ہیں۔ زلزلے سے سڑکوں پر گہرے شگاف پڑگئے اور کئی گاڑیاں الٹ گئیں جس کے باعث آمد و رفت منقطع ہوگئی ہے۔

کشمیر میں زلزلے کے نتیجے میں اب تک 30 افراد جاں بحق اور 400 سے زائد زخمی ہوگئے جب کہ اسلام آباد سمیت پنجاب اور خیبرپختونخوا کے کئی شہروں میں بھی زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے۔ زلزلہ کل سہ پہر 4 بج کر 2 منٹ پرآیا۔